Health Articles

Honey The great blessing of power

Honey  The great blessing of power

Honey The great blessing of power

:یہ موٴثر ترین جراثیم کش ہے

شہد ایک مفید مقدس غذا اور دوا بھی ہے۔شہد کو زمانہ قدیم ہی سے ایک پاک وطیب چیز سمجھا جاتا ہے اور بطور دوا وغذا استعمال کیا جاتا ہے ۔چقندر کی شکر کی ایجاد سے قبل شہد ہی کو مٹھاس کے لئے استعمال کیا جاتا تھا۔شہد ایک بے مثال بھر پور غذا اور دوا ہونے کے علاوہ ایک موٴثر قسم کی جراثیم کش تدبیر ہے ۔جدید تحقیقات طب وسائنس نے بھی اس پر مہر ثابت تسلیم کردی ہے کہ شہد میں کسی قسم کے جراثیم زندہ نہیں رہ سکتے ۔

جدید طب (ایلو پیتھی سسٹم آف میڈیسن )کی بنیادہی نظریہ جراثیم پر ہے ۔شہد جراثیم کش ہونے کے باعث نہ صرف جراثیمی امراض سے محفوظ رکھتا ہے بلکہ اس میں کسی قسم کے جراثیم زندہ نہیں رہ سکتے ۔شہد کی ایک خصوصیت یہ بھی ہے کہ یہ سڑتا نہیں ہے بلکہ دوسری چیز میں آمیز ہو کر اس کو بھی سڑنے سے بچاتا ہے ۔

شہد ہر حال میں ہر موسم اور ہر عمر میں مفید غذائی دوا ہے ۔

ذیابیطس کے مریض کو میٹھی اشیاء کے استعمال سے احتیاط کا مشورہ دیا جاتا ہے لیکن شہد ان کو بھی نقصان نہیں دیتا۔اللہ تعالیٰ نے انسان کو جتنی نعمتیں عطا فرمائی ہیں ان میں شہد اور دودھ کو اہمیت حاصل ہے ۔

شہد انسان کی اولین اور آخری غذا ہے ۔نوزائیدہ بچے کو بطور گھٹی چٹایا جاتا ہے تو جاں بلب مریض کو بھی دیا جاتا ہے ۔البتہ خالص شہد کا حصول آسان نہیں ہے ۔
بازار میں دھڑلے سے نقلی شہد فروخت ہورہا ہے جس سے مطلوبہ فوائد حاصل نہیں ہوتے ۔چھوٹی چھوٹی بیماریوں ،نزلہ،زکام اور کھانسی میں بڑی بوڑھیاں شہد تجویز کرتی ہیں تو بازاری شہد سے مطلوبہ فوائد نہیں ملتے۔جس کی وجہ سے لوگوں کا اس کے حقیقی فوائد سے یقین اٹھ جاتا ہے ۔ورنہ شہد ایک قدرتی ،لاجواب ٹانک ہے اور کوئی وٹامن یا مصنوعی ٹانک اس کا مقابلہ نہیں کر سکتا۔اگر چہ سائنسدانوں نے اس کے کیمیائی اجزء معلوم کرلئے ہیں مگر اس کے باوجود خالص شہد تیار کرنے سے قاصر رہے ہیں ۔
شہد کی ایک خوبی اس کا سریع الاثر ہونا ہے ۔کھانے سے قبل ہی اس کا نوے فیصد ہضم شدہ اور معدہ میں اترتے ہی جزوبدن بن جاتا ہے ۔جس سے فوراً توانائی کا احساس ہوتا ہے اس سے حاصل شدہ توانائی دیرپارہتی ہے ۔

رومن موٴرخ پلوٹارک نے قدیم برٹش کے لوگوں کے بارے میں لکھا ہے کہ ان کی عمر طویل ہونے کا سبب شہد کا بکثرت استعمال تھا۔قدیم یونانی فلاسفر بھی شہد کو طویل عمر والا مانتے ہیں ۔دیکھا گیا ہے کہ جن علاقوں میں شہد کا استعمال کیا جاتا ہے وہاں کے لوگ طویل العمر ہوتے ہیں اس سلسلے میں وسطی ایشیا کی ریاست آذربا ئیجان کا نام لیا جا سکتا ہے ۔
شہد تقریباً ہر مرض میں موٴثر ومفید ہے ۔یہی وجہ ہے کہ کہا جاتا ہے کہ سوائے موت کے ہر مرض کا علاج ہے ۔ڈاکٹر جی این ڈبلیو تھامس ایڈنبراسکاٹ لینڈ کا کہنا ہے کہ خرابی ہضم کے کئی مریضوں میں اختلاج قلب کا بھی عارضہ تھا۔میں نے شہد کا تجربہ کیا اور اسے دل کی بے ترتیب حرکت کو درست کرنے اور مریض کو قوت دینے والی عجیب مقوی چیز پایا۔
اسی طرح ڈاکٹر آرنلڈ جو معروف عالمی ماہر غذائیہ ہیں نے شہد کے فوائد اور مختلف مواقع پر اس کے استعمال کے طریقے بتائے ہیں ۔یونانی محکمہ حفظان صحت کے افسر اعلیٰ ڈاکٹر

جے ایچ کیو ج نے اپنی کتاب ”جدید غذائیہ میں لکھا ہے :
”کسی طویل بیماری میں مثلاً محرقہ یا نمونیہ وغیرہ میں مریض کا ہاضمہ کمزور ہو جاتا ہے ،ایسی صورت میں جب مریض کا دل بھی کمزور ہوتو شہد عمدہ تدبیر ہے۔“
ہاپکنیز یونیورسٹی کے پروفیسر ای وی میکا کہتے ہیں کہ شہد بہترین حفاظتی و مدافعتی تدبیر ہے ۔امریکن ڈاکٹر کلینٹس جار دس کا کہنا ہے کہ اگر جسم کے اندر معدنی اجزاء کم ہوں تو اسے پورا کرنے کا آسان نسخہ یہ ہے کہ دو چمچے سیب کے سرکہ میں اتنا ہی شہد ملا لیا جائے یہ ترش مرکب گھٹیا مرض سے لے کر دمہ تک اور بچپن سے بڑھاپے ،نیز جلد کے امراض تک تمام امراض میں شفاء بخش ہے ۔روسی عوام آگ سے جلے ہوئے کا علاج شہد سے تیار کردہ ایک مرہم سے کرتے ہیں ۔
یہ مرہم آسانی سے ہر گھر میں بنایا جا سکتا ہے اس طرح کہ شہد اور مچھلی کا تیل مساوی وزن لے کر اچھی طرح حل کرکے متاثرہ حصہ پر لگایا جائے۔روس میں یہ مرہم اب تجارتی بنیادوں پر تیار اور فروخت ہوتا ہے ۔برطانیہ کے ایک ثقہ طبی مجلہ”Lancet“میں شہد کے

اثرات کے بارے میں سرٹامس نے 1925میں اپنے مشاہدات تحریر کئے۔
”ہمارا طریقہ تھا کہ تیز بخار کے مریضوں کو کمزوری کے لئے دودھ اور یخنی دیا کرتے تھے ۔کچھ دوستوں کے مشورے پر ہم نے شدید نمونیہ کے مریضوں کو بیماری کے چار دنوں میں دو پونڈ شہد کھلایا،اس کا نتیجہ یہ نکلا کہ مریض کا بخار دوتین یوم میں اتر گیا،اس کی نبض باقاعدہ تنومندرہی ،جسم پر کمزوری کا کوئی اثر نہ تھا،بعد میں بخار بھی نہ ہوا ،پھیپھڑے بھی تندرست ہوئے اور کوئی پیچیدگی بھی ظاہر نہ ہوئی۔“

This is the most effective germ:

Honey is also a useful sacred diet and medication. Shahid is considered to be an ancient habit of ancient times and is used as medicine. Prior to the invention of Buddhist honey, honey was used for sweetness. Honey is an unusually full-fledged diet apart from diet and medicine, an effective type of biochemistry. Early investigation medical sources have also acknowledged that there is no type of germ in the honey.

The abstract theory of the modern medicine (the Elite Potato System of Medicine) is on the germ .Charm germ is not only protected by bacterial diseases but can not survive any type of germ. There is also a feature of the covenant that This is not the road, but the other thing prevents it from molding it.
Honey is a useful diet for every season and every age.

Diabetes patients are carefully advised to use sweet items, but honey does not harm them. The honey and milk are important as the Almighty gives humans. Honey The great blessing of power
Honey is the first and final diet of the human being .When the newborn is bitten as a child, the bulb is also given to the patient .The acquisition of pure honey is not easy.

The bargain in the market is selling honey honey, which does not get the desired benefits. Large elderly diseases, chronic diseases, stomach, and cough suggest honey if the honey honey does not get the necessary benefits. Real benefits are believed to be .Only honey is a natural, terrific tank and no vitamins or artificial tanks can compete with it.
If scientists find out its chemical ingredients, yet even pure honey is unable to prepare.

A goodness of honey is to be effective. Its ninth percent becomes its part of the digestive and stomach before it is eaten. The energy obtained from the moment is a feeling of energy.
Roman historian Platarkark has written about the ancient British people that their age was long enough to use honey.

Ancient Greek philosopher also honey honey. It is noted that the areas where honey is used, people can be named as the Central Asian state of Azerbaijan.Honey The great blessing of power

Honey is sufficiently effective in every disease. This is why every disease is treated except that. GNW Thomas Edinburghkotland says that there was a disorder of heart disease in many patients with disorder.

I tested honey and found it odd thing to correct the random movement of the heart and to give the patient a strength.
Similarly, Dr Arnold, the leading global nutrition, has shown honey benefits and how to use it on various occasions. The hygiene officer, Dr. JH Kyo, the Department of Health, has written in his book

“Modern Diet:

“In some long illness, such as depression or salmon etc., weighs the patient’s disease, in case the honey’s heart is weak, honey is a good fit.

E.V. Maca, professor of the Hopkins University, says Honey is the best protection and immune procedure. The American doctor Clinets Jar Ten says that if the mineral ingredients are low in the body, it is easy to cater to the two spots of apple vinegar. The same mixture of honey should be mixed, this trash mixture is shivering from toxic to asthma and childhood, as well as all diseases to skin diseases.Honey The great blessing of power

Russian people treat fire-filled treatments with honey preparedness.
This hemorrhoids can be made easily in every house, such as honey and fish oil, equally weighing and packaging on the affected area. This disease in Crossoum is now developed and sold on a commercial basis. Sartamas wrote his observations in the year 1925 about the effects of honey in the “Lancet” medieval magazine.

“It was our way that patients with high fever used to give milk and blemish for weakening.” On some advice we found severe pneumonia feeding two pounds of honey in four days of illness, resulting in the patient’s The fever went to the two-day day, its pulse was not regular, there was no effect on weakness on the body, later there was no fever, lungs were also tired and no complexity was also seen. ”

sourceUrduPoint.com.

 

Tags

Related Articles

One Comment

  1. Hey,
    lately I have finished preparing my ultimate tutorial:

    +++ [Beginner’s Guide] How To Make A Website From Scratch +++

    I would really apprecaite your feedback, so I can improve my craft.

    Link: https://janzac.com/how-to-make-a-website/

    If you know someone who may benefit from reading it, I would be really grateful for sharing a link.

    Much love from Poland!
    Cheers

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button
Close
Close